ذاتی پسند ناپسند کی بنیاد پراقلیتی نمائندے مسلط کرنا عوام کے بنیادی جمہوری حقوق کی خلاف ورزی ہے

556

اسلام آباد (23جون2015ء): پاکستان ہندوکونسل کے سرپرست اعلیٰ اور ممبر قومی اسمبلی ڈاکٹر رمیش کمار ونکوانی نے لوکل گورنمنٹ ، صوبائی و پارلیمانی انتخابات میں مخصوص نشستوں کے امیدواروں کی بلاواسطہ نامزدگی کی سخت الفاط میں مخالفت کرتے ہوئے اقدام کو خلافِ آئین اور غیرجمہوری قرار دیا ہے۔ منگل کے روز پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر میڈیا سے گفتگو میں ڈاکٹر رمیش ونکوانی نے کہا کہ جیتنے والی سیاسی جماعتوں کی جانب سے پسند ناپسند کی بنیادوں پر مخصوص نشستوں کے امیدواروں کا انتخاب عوام کے بنیادی جمہوری حقوق کی خلاف ورزی ہے جسکی بناء پر اقلیتی باشندوں کواپنے حقیقی نمائندوں کا چناؤ کرنے کیلئے دوہرے ووٹ کا حق دیا جائے، انہوں نے مزید بتایا کہ دوہرے ووٹ کے حوالے سے انکی سفارشات الیکشن اصلاحات کمیٹی میں زیرغور ہیں ۔ آرٹیکل 140-Aکا حوالہ دیتے ہوئے ڈاکٹر رمیش ونکوانی کا کہنا تھاکہ پسند ناپسند کی بنیاد پر جیتنے والی سیاسی جماعت کو اقلیتوں کا نمائندہ نامزد کرنے سے وسیع پیمانے پر کرپشن، اقرباپروری اور رشوت خوری کے اندیشے کو رد نہیں کیا جاسکتا۔

Load More Related Articles
Load More In اردو - URDU
Comments are closed.

Check Also

سرزمین کوریا میں امن کی تلاش (Daily Jang, 16 February 2019)