ڈاکٹر رمیش کمار وانکوانی کا ایک ہفتے کے اندر مندر اراضی واگزار کرانے کا مطالبہ

143

کراچی (23اپریل2017 ؁ء): پاکستان ہندو کونسل کے سرپرستِ اعلیٰ اور ممبر قومی اسمبلی ڈاکٹر رمیش کمار وانکوانی نے سندھ کے تاریخی شِو مندر کی اراضی پر ناجائز قبضے پر سخت غم و غصے کا اظہار کیا ہے، اتوار کو صحافیوں کے ہمراہ ڈسٹرکٹ سجاول کے علاقے چوڑجمالی میں قائم مندر کا دورہ کرتے ہوئے ڈاکٹر رمیش وانکوانی نے کہا کہ سندھ محبت کا پیغام عام کرنے والوں کی دھرتی ہے، صدیوں سے مختلف مذاہب کے ماننے والے امن و آشتی سے رہتے آرہے ہیں، مقدس شِو مندرکی اراضی پر سیاسی جماعت کے عہدے داران کے ناجائز قبضے کی وجہ سے ہندو کمیونٹی کے مذہبی جذبات مجروح ہو رہے ہیں،انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت کی ذمہ داری ہے کہ وہ تمام مذاہب کے ماننے والوں کے مقدس مقامات کی حفاظت یقینی بنائے، اس موقع پر مقامی ہندوعقیدتمندوں نے آگاہ کیا کہ مندر کے ارد گرد حکومتی جماعت کے اسٹوڈنٹس ونگ سندھ پیپلز اسٹوڈنٹس فیڈریشن کے عہدے داران نے اپنی جماعت کے جھنڈے گاڑکر ناجائز قبضہ کررکھا ہے، مندر کی اراضی پر کمرشل دکانیں تعمیر کی جارہی ہیں جبکہ بچوں کی سمادھی کیلئے مختص مقام کو بھی نہیں بخشا گیا ہے۔ ڈاکٹر رمیش کمار وانکوانی کے زیرقیادت پاکستان ہندو کونسل وفد کی آمد کی اطلاع پاکر مقامی انتظامیہ کے اعلیٰ افسران بھی موقع پر پہنچ گئے، ڈاکٹر رمیش وانکوانی نے ڈپٹی کمشنر، اسسٹنٹ کمشنر اور ایس ایچ او سے مندر کی اراضی ایک ہفتے کے اندر واگزار کرانے کا مطالبہ کیا، ڈاکٹر رمیش وانکوانی کا کہنا تھا کہ وہ مقامی ایم پی اے محمد علیم مالکانی سے بھی اپیل کرتے ہیں کہ وہ معاملے کی نذاکت سمجھتے ہوئے قابضین کیلئے خلاف سخت ایکشن لیں۔

Load More Related Articles
Load More By PHC
Load More In Press Releases

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Check Also

جزیرہ نما کوریا میں امن کی تلاش تحریر: ڈاکٹر رمیش کمار وانکوانی

میں جنوبی کوریا کے دارالحکومت سیول میں عالمی امن کانفرنس میں پاکستان کی نمائندگی کرتے ہوئے…