سندھ بلدیاتی انتخابات اور ڈاکٹر رمیش کمار ونکوانی ایم این اے پر قاتلانہ حملہ

583

کراچی (20نومبر2015ء): سندھ میں 19نومبر کے بلدیاتی انتخابات کے موقع پر مسلم لیگ (ن)کے سرکردہ راہنماء ڈاکٹر رمیش کمار ونکوانی قاتلانہ حملے میں بال بال بچ گئے ہیں، تفصیلات کے مطابق اقلیتی ممبر قومی اسمبلی پر حملہ جمعرات کو سہ پہر تین بجے کے لگ بھگ ان کے علاقے اسلام کوٹ میں کیا گیا، پولیس نے وزیراعلیٰ سندھ قائم علی شاہ کے ایماء پر نہ صرف حملے کی ایف آئی آر درج کرنے سے انکار کردیا بلکہ الٹاڈاکٹر رمیش کمار ونکوانی کے خلاف ایف آئی آر درج کرنے کی اطلاعات ہیں، حملے کی منظرعام پر آنے والی ویڈیو میں صاف دیکھا جاسکتا ہے کہ کس طرح پیپلز پارٹی کے منوج ملانی، ششیر ملانی اور کلدیپ پروانی سمیت دیگر کارکنوں کی جانب سے تھر کے ہردلعزیز اقلیتی ممبرقومی اسمبلی کے خلاف غنڈہ گردی کامظاہرہ کیا جارہا ہے جبکہ پولیس ، رینجرز اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی بے بسی عیاں ہے ۔ ڈاکٹر رمیش ونکوانی نے وزیراعظم نواز شریف سے واقعہ کا فوری نوٹس لینے کی استدعا کرتے ہوئے تحفظ فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ انکا کہنا ہے کہ تھر میں مسلم لیگ (ن)کے متحرک کردار کی بناء پر مخالف پیپلز پارٹی خوفزدہ ہے، کچھ دن قبل بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے انہیں راون قرار دینے کے قابلِ مذمت بیان دیا تھا،کے بعد یہ قاتلانہ حملہ اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے، تھرسمیت ملک بھر کے غریب عوام کے حقوق کے تحفظ کیلئے جدوجہد جاری رہے گی۔صوبائی و قومی سطع پر نمایاں سیاسی و سماجی شخصیتوں نے ڈاکٹر رمیش کمار ونکوانی جو کہ پاکستان ہندوکونسل کے سربراہ بھی ہیں پر حملے کو جمہوری اقدار کے منافی ، انسانی و اقلیتی حقوق کی سنگین خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے پیپلز پارٹی حکومت کی مذمت کی ہے۔

Load More Related Articles
Load More By PHC
Load More In اردو - URDU
Comments are closed.

Check Also

Call for humanity by Dr. Ramesh Kumar Vankwani

Every sensible peace-loving human is worried about the tense situation in Occupied Kashmir…